Tuesday, December 13, 2005

اللہ اکبر ۔ سبحان اللہ ۔ جسے اللہ رکھے ۔

آج کی ترقی یافتہ سائنس یہ ماننے کے لئے تیار نہیں ہو گی کہ ملبے کے نیچے دبا کوئی انسان 15 دن سے زیادہ زندہ رہ سکتا ہے ۔ لیکن جب اللہ تعالی کی قدرت سے 63 دن بعد ایک انسان ملبے کے نیچے سے زندہ نکلتا ہے تو انسان کے بناۓ ہوۓ سائنس کے سارے اصول دھرے کے دھرے رہ جاتے ہیں اور انسان کہہ اٹھتا ہے "اور تم اللہ کی کون کونسی نعمتوں کو جھٹلاؤ گے ؟" مظفرآْباد سے 5 میل کے فاصلہ پر کمسر میں مقبوضہ کشمیر سے آۓ ہوۓ مہاجرین کا کیمپ ہے ۔ یہ مہاجرین 8 اکتوبر کے زلزلہ سے گرے ہوۓ مکانوں کا ملبہ ہٹا رہے تھے کہ 10 دسمبر کو ملبے کے نیچے دبی ہوئی ایک 45 سالہ خاتون زندہ ملی ۔ اس خاتون کے والدین اور دو بھائی اسی زلزلہ میں ہلاک ہو چکے ہیں ۔ دو دن یہ خاتون مقامی لوگوں کے پاس رہی ۔ 12 دسمبر کو جرمن ڈاکٹروں کی ایک ٹیم ٹیکے لگانے کے لئے وہاں پہنچی تو لوگوں نے بتایا کہ یہ خاتون ملبے کے نیچے سے نکلی ہے اور کچھ کھا پی نہیں رہی ہے ۔ جرمن ڈاکٹروں نے پاکستان اسلامِک میڈیکل ایسوسی ایشن کے ساتھ رابطہ کیا ۔ اس تنظیم کے ڈاکٹر وہاں گئے اور اس خاتون کو لیکر مظفرآباد آئے۔ اس خاتون کا وزن صرف 25 کلوگرام رہ گیا ہوا ہے ۔ مظفرآباد میں ڈاکٹر اس خاتون کا طبی معائنہ کررہے ہیں ۔ اس کی حالت کا صحیح پتہ چلنے کے بعد اسے مناسب طبّی اور دیگر امداد فراہم کی جائے گی تصویر بشکریہ نواۓ وقت

2 Comments:

At 12/14/2005 12:58:00 PM, Blogger Asma said...

Alhamdollillah!

Plz point to the news item also !!!

 
At 12/14/2005 06:01:00 PM, Blogger iabhopal said...

Miss Asma
Here are the links
http://nawaiwaqt.com.pk/urdu/daily/dec-2005/13/aham.php#10
http://www.bbc.co.uk/urdu/pakistan/story/2005/12/051214_nakshabibi_quake_zs.shtml
http://www.dawn.com/2005/12/13/top4.htm
http://jang.com.pk/thenews/dec2005-daily/13-12-2005/main/main6.htm

 

Post a Comment

links to this post:

Create a Link

<< Home